کویت واپس آنے والوں کے لئے بڑی خوشخبری، متعدد پابندیوں کے خاتمے کا اعلان

کویت کے وزیر اعظم شیخ صباح الخالد نے کویت میں کورونا وائرس کی وجہ سے عائد کئی پابندیوں کو ہٹانے کا اعلان کرتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ ملک نئی لہر سے نمٹنے کے قابل ہے۔

الخالد نے کہا کہ کونسل نے حالیہ فیصلوں، وائرس سے نمٹنے کے لیے کویت داخل ہونے کے طریقہ کار کا مطالعہ کیا اور بہت سے فیصلوں کو منسوخ کرنے کے فیصلے کیے ہیں جن میں مساجد میں صفوں کو دوبارہ ترتیب دینا، سب کو سفر کی اجازت دینا بشمول ویکسین شدہ اور غیر ویکسین شدہ اور ہر ایک کے لیے تجارتی کمپلیکس میں داخلہ کھولنا شامل ہیں۔

یہ فیصلے اومیکرون لہر کی مسلسل کمی اور گزشتہ دنوں کورونا وائرس کے انفیکشن کی تعداد میں کمی کے بعد سامنے آئے ہیں جس نے “پابندیوں سے نجات” کے پیکیج کا دروازہ کھولا جیسا کہ متعدد پڑوسی ممالک نے کیا تھا۔

وزارتی کمیٹی برائے کورونا ایمرجنسی نے متعدد سفارشات کا مطالعہ کیا جس میں اومیکرون کے پھیلاؤ کے پیش نظر پابندیوں کو کم کرنے کے طریقہ کار شامل تھے جن میں وبائی مرض سے پہلے مساجد میں نماز کی واپسی بھی شامل ہے۔ متاثرین کی قرنطینہ مدت میں کمی اور 100 فیصد صلاحیت کے ساتھ سرکاری اداروں کی کام پر واپسی بھی شامل تھی۔

وزیر صحت ڈاکٹر خالد السعید نے کہا کہ کویت میں ویکسی نیشن کی شرح 85 فیصد تک پہنچ گئی ہے جو کہ دنیا کے ممالک میں سب سے زیادہ ہے۔

آج ہونے والی ایک پریس کانفرنس کے دوران ایک سوال کے جواب میں السعید نے کہا کہ ’ڈیلٹا‘ لہر سے زیادہ متاثر ہونے کے باوجود انتہائی نگہداشت میں داخل ہونے والوں کی تعداد کویت کی طرف سے حاصل کردہ ویکسی نیشن کی شرح کی وجہ سے کم ہو چکی ہے جبکہ یہی شرح یومیہ متاثرین کی تعداد تقریباً 7000 تک پہنچ گئی تھی۔

وزراء کی کونسل نے کورونا وائرس کی چوتھی لہر سے نمٹنے میں تعاون پر شہریوں اور غیر ملکیوں کا شکریہ ادا کیا اور مندرجہ ذیل فیصلے جاری کئے۔

13 مارچ سے سرکاری دفاتر اپنی 100 فیصد صلاحیت کے ساتھ کام کریں گے۔ پبلک ٹرانسپورٹ کو پوری صلاحیت کے ساتھ کام شروع کرے گی۔ بیرون ملک سے کویت آنے والے پی سی آر کی ضرورت کو منسوخ کر دیا گیا ہے۔ غیر ویکسین شدہ افراد کو مالز، کمپلیکس، سینما گھروں، تھیٹرز اور سماجی تقریبات میں داخل ہونے کی اجازت ہے بشرطیکہ ان کے پاس ان جگہوں میں داخل ہونے سے 72 گھنٹے پہلے کا درست پی سی آر ہو۔ ویکسین شدہ و غیر ویکسین شدہ ہر کسی کو سفر کرنے کی اجازت ہو گی۔ جہاز میں مسافروں کی مخصوص تعداد کو لے جانے کے لیے کوئی شرط نہیں ہے۔ کورونا وائرس کے لیے ویکسی نیشن کی مزید خوراکیں (بوسٹر) نہیں دی جائیں گی لیکن عام فلو کے طور پر علاج کیا جائے گا۔ وزارت تعلیم کے مشورے سے آف لائن کلاسز میں واپس کی اجازت ہو گی.

بحوالہ: کویت اردو نیوز

اپنا تبصرہ بھیجیں