15 اگست سے اساتذہ کی کویت واپسی کا عمل شروع کرنے کا فیصلہ کر لیا گیا

وزارت تعلیم نے ملک سے باہر پھنسے ہوئے اساتذہ کی وطن واپسی کے لئے انتظامات مکمل کر لئے ، 15 اگست سے اساتذہ کی واپسی کا عمل شروع کردیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق وزارت داخلہ کے قابل حکام بالخصوص لینڈ بارڈرز ڈیپارٹمنٹ اور ڈائریکٹوریٹ جنرل آف سول ایوی ایشن (DGCA) نے حالیہ کابینہ کے فیصلوں کے مطابق تارکین وطن کو ملک میں داخل ہونے کی اجازت دینے کے طریقہ کار پر عمل درآمد شروع کردیا ہے۔ کورونا کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے اٹھائے گئے اقدامات کی وجہ سے تقریبا 2000 غیر ملکی اساتذہ جو بیرون ملک پھنسے ہوئے ہیں جلد ہی ملک میں داخل ہونا شروع کر دیں گے۔ ان میں سے کچھ اساتذہ ڈیڑھ سال سے زائد عرصے سے ملک سے باہر ہیں۔ ذرائع نے انکشاف کیا کہ وزارت تعلیم نے پہلے اپنے اندرونی ہم منصب کو پھنسے ہوئے اساتذہ کے بارے میں معلومات فراہم کیں جیسے کہ ان کی کل تعداد اور نام وغیرہ تاکہ ان لوگوں کے لیے انٹری ویزا جاری کیا جائے جن کے رہائشی اجازت ناموں کی معیاد بیرون ملک رہتے ہوئے ختم ہوگئی ہے اور ان کی آمد کی تیاری کے لیے طریقہ کار ترتیب دیا جاسکے۔

ذرائع نے بتایا کہ وزارت تعلیم نے اپنی سرکاری ویب سائٹ پر پھنسے ہوئے اساتذہ کے لیے ایک خصوصی لنک لانچ کیا ہے جس پر جولائی کے وسط تک 1،620 سے زیادہ پھنسے ہوئے اساتذہ نے رجسٹر کیا ہے۔ ذرائع نے تصدیق کی کہ وزارت تعلیم کے متعلقہ حکام نے بیرون ممالک پھنسے ہوئے 650 اساتذہ کے ڈیٹا کو ترتیب دیا اور جائزہ لیا جبکہ ان کے ویزوں کا اجرا اگست کے وسط میں شروع ہو جائے گا تاہم رجسٹریشن کرنے والے دوسرے اساتذہ کے لیے طریقہ کار جلد کامیابی سے مکمل کیا جائے گا۔

ذرائع نے مزید کہا کہ اساتذہ جو ملک پہنچیں گے وہ صحت کے ضوابط ، جیسے قرنطین اور دیگر کے تابع ہوں گے۔ ذرائع نے وضاحت کی کہ ان اساتذہ سے رابطہ کی تفصیلات اور ای میل ایڈریس کے ذریعے رابطہ کیا جائے گا جو انہوں نے وزارت تعلیم کی آفیشل ویب سائٹ پر ڈالے ہیں جہاں ویزے کی ایک کاپی بھیجی جائے گی ، فلائٹ ریزرویشن کی تصدیق کی جائے گی اور صحت سے متعلق طریقہ کار مکمل کیا جائے گا تاکہ یہ یقینی بنایا جا سکے کہ انہیں ملک میں داخل ہونے دیا جائے گا۔

ذرائع :کویت اردو نیوز

اپنا تبصرہ بھیجیں