غیرملکیوں کی کویت واپسی کے لئے وزراء کونسل نے شاندار اعلان کر دیا

کویت کابینہ نے اپنے گزشتہ اجلاس میں آئندہ اتوار سے عوام کو صحت کی ضروریات کے مطابق بیٹھنے کے لئے ریستوراں اور کیفے دوبارہ کھولنے کی منظوری دی۔

تفصیلات کے مطابق آج منگل کو وزراء کونسل نے ہفتہ وار اجلاس عزت مآب شیخ صباح الخالد کی زیر صدارت منعقد کیا۔ کونسل نے وزیر صحت کی طرف سے کورونا کے وبا سے متعلق تازہ ترین پیشرفتوں کے بارے میں فراہم کردہ وضاحت کو سنا جو الحمدللہ متاثرین کی تعداد میں کمی اور بحالی کی اعلی شرح 95.3 فیصد تک پہنچنے کی وجہ سے ملک میں صحت کی صورتحال کے استحکام اور اموات اور گہری نگہداشت میں علاج حاصل کرنے والوں کی تعداد میں واضح کمی کی نشاندہی کرتا ہے۔

کابینہ نے ملک کی صحت کی صورتحال کے استحکام پر انتہائی اطمینان کا اظہار کیا۔ کابینہ نے وزارت صحت کے عہدیداروں ، ڈاکٹروں ، طبی عملے اور معاون عملے کی کارکردگی، تکمیل میں دیانتدارانہ کاوشوں، انسان دوست کاموں اور عظیم قربانیوں پر فخر کا اظہار کیا۔

کونسل نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ مزید نوٹس جاری ہونے تک براہ راست پروازوں کو صرف مندرجہ ذیل ممالک (بھارت ، نیپال ، پاکستان ، بنگلہ دیش ، سری لنکا) کے لئے صرف کویت سے روانہ ہونے والی پروازوں تک محدود کیاجائے گا جبکہ ان ممالک کے لئے کارگو پروازیں بدستور جاری رہیں گی نیز ان پروازوں کے عملے کو تبدیل نہ کرنے کا بھی پابند کیا گیا ہے۔

کابینہ نے ملک آنے والے مندرجہ ذیل مسافروں کے لئے قرنطین کو ختم کرنے کا بھی فیصلہ کیا بشرطیکہ پی سی آر ٹیسٹ کویت پہنچنے کی تاریخ سے تین دن کے اندر کروایا جائے جس میں یہ بتایا گیا ہو کہ متعلقہ شخص کورونا وائرس سے انفیکشن سے پاک ہیں۔

مدافعتی ویکسین جنہوں نے ریاست کویت سے منظور شدہ کورونا وائرس ویکسین وصول کی ہو۔
وہ لوگ جو کورونا وائرس کے انفیکشن سے ٹھیک ہوئے ہیں اور انہیں صحتیاب ہوئے (90) دن سے زیادہ مدت نہ ہوئی ہو۔
کابینہ کی قرارداد نمبر 502 فرسٹ جو 2 مئی 2021 کو ملک سے باہر جانے کے لیے شہریوں کو حفاظتی ویکسین لگائے جانے کے سلسلے میں اختیار کی گئی ہفتہ 22 مئی 2021 سے مندرجہ ذیل زمرے اس فیصلے سے خارج ہوں گے۔

ایسے شہری جن کے پاس وزارت صحت کے ذریعہ منظور شدہ سرٹیفیکٹ ہو کہ وہ صحت کی وجوہات کی بناء پر ویکسین حاصل کرنے سے قاصر ہیں۔
حاملہ شہری خواتین جن کے پاس وزارت صحت کے ذریعہ منظور شدہ حمل کے ثبوت کا سرٹیفکیٹ ہو۔

ذرائع: الرای۔ کویت اردو نیوز

اپنا تبصرہ بھیجیں