رہائشی حیثیت میں ترمیم کے لئےاب تک 30,000 غیر ملکیوں کا جوازات کا دورہ

سیکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ رہائشی امور کا اب تک تقریبا 30,000 غیر ملکیوں نے دورہ کیا کیونکہ ان کی رہائش یکم ستمبر سے ختم ہوگئی تھی۔ آرٹیکل 14 سے رہائش کی حیثیت میں ترمیم کرنے میں ناکامی پر2دینار یومیہ جرمانے کی ادائیگی کا باعث بنے گی۔ چونکہ کچھ افراد اب بھی یقین رکھتے ہیں کہ آرٹیکل 14 (تمدید) 30 نومبر تک جائز ہے۔

روزنامہ القبس کی رپورٹ کے مطابق ریذیڈنسی امور کے ذرائع نے بتایا کہ ہزاروں غیر ملکیوں نے اپنے زیر کفالت یا کمپنیوں نے اقامہ کی حیثیت میں ترمیم کرنے یا عارضی رہائش حاصل کرنے کے یا کارکنوں کے لئے ایک نئی رہائشی اجازت نامہ حاصل کرنے کے لئےیا ایک نیا ورک پرمٹ فراہم کرنے کے لئےابھی تک درخواستیں پیش نہیں کیں۔ جن لوگوں کی رہائش اگست کے بعد ختم ہوگئی ہے اور جس نے اسٹیٹس میں ترمیم نہیں کی ہے انھیں ہر روز 2دینار جرمانہ ادا کرنا پڑے گا۔ وزارت داخلہ نے کفیلوں ، خاندان کے سربراہان سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اس حالت کو بہتر بنائے اور جرمانہ ادا کرے۔

بحوالہ : عرب ٹائمز کویت

اپنا تبصرہ بھیجیں